پاک بنگلادیش ٹیسٹ: سیکیورٹی پلان جاری، 5 ہزار اہلکار تعینات

راولپنڈی (این پی پی) پاکستان اور بنگلا دیش کرکٹ میچ کے لیے راولپنڈی پولیس نے سیکیورٹی پلان جاری کر دیا، حفاظتی انتظامات کے تحت لگ بھگ 5 ہزار افسران و اہلکار سیکیورٹی پر متعین ہوں گے جن میں ایلیٹ فورس، محافظ اسکواڈ ور لیڈیز پولیس بھی شامل ہوں گی، میچ سے پہلے مختلف علاقوں میں سرچ آپریشن کیا جائے گا، سیکیورٹی کو فول پروف بنانے کی خاطر ہرممکن اقدامات کیے جائیں گے۔ میچ کے علاوہ ٹیموں کے پریکٹس سیشن اور آمد ورفت کے لیے بھی سیکیورٹی کے انتظامات کیے گئے ہیں۔شائقین کرکٹ مخصوص راستوں سے گزر کر اسٹیڈیم میں داخل ہوسکیں گے، شائقین کرکٹ کو واک تھرو گیٹ اور میٹل ڈیٹیکٹر سے چیک کرنے کے علاوہ فزیکل چیکنگ کے مراحل سے بھی گزرنا ہوگا، خواتین کی چیکنگ کے لیے لیڈیز پولیس کو تعینات کیا گیا ہے، سیکیورٹی کے پلان کے مطابق اسٹیڈیم کے اطراف اور روٹ پر روف ٹاپ پر ماہر نشانہ باز اسنائپرز کو تعینات کیا جائے گا، سیکیورٹی کو فول پروف بنانے کے لیے تمام افسران اپنے ماتحت اسٹاف کو وقتاًفوقتاً چیک اور بریف کرتے رہیں گے۔شہر کے داخلی اور خارجی راستوں پر سیکیورٹی کے انتظامات متعلقہ اضلاع کی ذمے داری ہو گی جو راولپنڈی میں داخل ہونے والی گاڑیوں اور اشخاص کو چیکنگ کے بعد داخلے کی اجازت دیں گے، ڈیوٹی پر مامور افسران و اہلکاروں کو وقت سے پہلے ڈیوٹی پوائنٹ پر رپورٹ کرنے کے احکامات بھی جاری کیے گئے ہیں۔ 2009 میں لاہور میں سری لنکا کی ٹیم پر حملے کےبعد بین الاقوامی کھیلوں کے مقابلوں کے لیے پاکستانی میدان شجر ممنوعہ ہوگئے تھے، اب اس حوالے سے صورت حال بہتر رُخ اختیار کررہی ہے اور انٹرنیشنل ٹیمیں پاکستان آرہی ہیں۔ اس تناظر میں ایسے ہی سخت اقدامات وقت ہی اہم ضرورت ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں