کنگنا راناوت کیئرئیر کے آغاز میں کئی بار ریپ ہوا تصدیق ملزم گرفتار

بولی وڈ کی کئی کامیاب فلموں میں کام کرنے والے اداکار ادیتیا پنچولی کے خلاف فلم انڈسٹری کی اداکارہ نے ریپ کا الزام لگاتے ہوئے مقدمہ

درج کروا دیا جس کے بعد اداکار کو گرفتار کرلیا گیا۔

انڈین ایکسپریس کی رپورٹ کے مطابق انڈین پینل کوڈ کی دفعہ 376، 328، 384، 341، 342، 323، 506 کے تحت ممبئی کے پولیس

اسٹیشن میں ایف آئی آر درج کی گئی۔

رپورٹ میں مزید بتایا گیا کہ یہ مقدمہ بولی وڈ کی اداکارہ کی بہن نے درج کروایا، جس میں ادیتیا پنچولی پر تشدد اور ریپ کرنے کا الزام عائد

کیا گیا۔

اداکارہ نے پولیس کو دیے بیان میں بتایا کہ ادیتیا پنچولی نے کم عمری میں کئی مرتبہ ان کا ریپ کیا۔

اداکار کے مطابق انہوں نے اس وقت بھی ادیتیا کے خلاف پولیس میں شکایت درج کروائی تھی تاہم پولیس نے انہیں صرف وارننگ دے کر

چھوڑ دیا۔

ایف آئی آر درج ہو نے کے بعد پولیس نے کارروائی کا آغاز کردیا۔

اس حوالے سے اداکارہ کا نام تو سامنے نہیں آیا تاہم خیال کیا جارہا ہے کہ ادیتیا پنچولی کے خلاف یہ مقدمہ کنگنا رناوٹ اور ان کی بہن

رنگولی نے درج کروایا۔

یاد رہے کہ رواں سال کنگنا رناوٹ نے ادیتیا پنچولی پر جنسی ہراساں اور ریپ کا الزام عائد کیا۔

جس کے بعد ادیتیا اور زرینہ نے کنگنا اور ان کی بہن کے خلاف ہتک عزت کا مقدمہ درج کروادیا۔

بعدازاں زرینہ وہاب کا اپنے ایک انٹرویو میں کہنا تھا کہ کنگنا رناوٹ 4 سال سے زائد عرصے تک ان کے شوہر کے ساتھ تعلقات میں رہیں

اور بعد میں ان پر جنسی ہراساں اور ریپ کا الزام عائد کردیا۔

خیال رہے کہ کنگنا رناوٹ نے ادیتیا پنچولی پر پہلی بار جنسی طور پر ہراساں کرنے کے الزامات 2017 میں لگائے تھے اور دعویٰ کیا تھا

کہ کیریئر کے ابتدائی دنوں میں اداکار نے انہیں استعمال کیا اور ان کے ساتھ ناروا سلوک رکھا۔

کنگنا رناوٹ کے مطابق کیریئر کے ابتدائی دنوں میں ان کے اور ادیتیا پنچولی کے درمیان تعلقات تھے اور اداکار نے ان کے ساتھ نامناسب

رویہ اختیار کرنے سمیت انہیں دھوکا دیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں